En

دوسری پاکستان انرجی ریفارم سمٹ 2022  کا انعقاد

By Staff Reporter | Gwadar Pro May 20, 2022

 

اسلام آباد  (گوادر پرو)   ملک کی توانائی کے نئے دور سے فائدہ اٹھانے کے لیے  دوسری پاکستان انرجی ریفارمز سمٹ 2020 (PERS-2022) 17 سے 18 مئی کو اسلام آباد میں منعقد ہوئی۔ سمٹ کا مقصد توانائی کے متفرق مرکب میں جدت اور سرمایہ کاری کے کثیر جہتی تعاون کو راغب کرکے پاکستان میں توانائی اور بجلی کے شعبے کی بحالی میں مدد کرنا تھا۔

چینی کمپنیوں کے عہدیداروں، 400 کے قریب مندوبین اور 30  سے  زائد سپانسرز اور نمائش کنندگان سمیت 50 سے زائد مقررین موجود تھے۔

مقررین نے جدید دور میں قابل تجدید توانائی کی اہمیت پر روشنی ڈالی اور اس بارے میں خیالات اور تجاویز کا اشتراک کیا کہ کس طرح پاکستان 2030 تک بجلی کی مجموعی پیداوار میں 30 فیصد قابل تجدید توانائی کا ہدف حاصل کر سکتا ہے۔ انہوں نے پاکستان کے انرجی مکس میں قابل تجدید توانائی کی توسیع پر زور دیا اور شمسی توانائی میں خود مختار بجلی پیدا کرنے والوں کی حمایت کرنے کی حوصلہ افزائی کی۔

کے-سولر (چین) کے سی ای او ہاشم رضا نے کہا کہ پاکستان میں شمسی توانائی کی پیداوار بڑھانے کا وقت آگیا ہے۔ شمسی توانائی کی توسیع پاکستان کو نہ صرف بجلی کی بڑھتی ہوئی طلب کو پورا کرنے کے قابل بنائے گی بلکہ موسمیاتی تبدیلی کے مسئلے میں بھی مدد ملے گی۔ 

چینی کمپنیاں پی ای آر ایس 2022 کے سرفہرست اسپانسرز میں شامل تھیں، جن کا اشتراک پاور اینڈ رینیوایبل انرجی سمٹ، آئل، گیس اور پیٹرو کیمیکل سمٹ کے ساتھ کیا گیا تھا۔ مندوبین اور زائرین نے کانفرنس کے مقام پر قائم کیے جانے والے چینی سولر پینل اور انورٹر بنانے والی کمپنیوں کے بوتھس میں گہری دلچسپی ظاہر کی۔

  • comments
  • give_like
  • collection
Edit
More Articles