En

ایس سی او ممبر ڈیجیٹل معیشت کے فروغ کیلئے  پاکستانی مارکیٹوں کا استعمال کریں گے، بدر الزمان

By Staff Reporter | Gwadar Pro Dec 13, 2021

بیجنگ  (گوادر پرو)بیجنگ میں پاکستانی سفارت خانے کے کمرشل قونصلر بدر الزمان نے کہا  ہے کہ ڈیجیٹل اکانومی جدت اور وسیع انفراسٹرکچر سے جڑی ہوئی ہے، یہ دونوں پہلو پاکستان کے نقطہ نظر سے ابھی تک غیر استعمال شدہ ہیں،  اس لیے شنگھائی تعاون تنظیم (ایس سی او) کے ممبرز پاکستانی مارکیٹ، اس کے وسائل کو اپنی ڈیجیٹل معیشت کو فروغ دینے کے لیے استعمال کریں گے۔
 
ڈیجیٹل اکانومی ڈرائیونگ ایس سی او  انویشن  اینڈ ڈویلپمنٹ   کے موضوع پر ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے  انہوں نے کہا کہ پاکستان نے حکومتی انتظام اور انفراسٹرکچر جیسے مختلف پہلوؤں میں ڈیجیٹل اصلاحات نافذ کی ہیں اور سماجی آپریشنز کی مجموعی کارکردگی کو فروغ دیا ہے۔
 
بدر نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت پاکستان اور چین کے درمیان آپٹیکل فائبر کیبل پراجیکٹ پہلے ہی موجود ہے۔ یہ منصوبہ پاکستان میں آئی سی ٹی اور ٹیلی کام انڈسٹری کو بہتر بنانے، سیاحت، آئی اے، 4 جی، 5 جی اور دیگر متعلقہ صنعتوں کو فروغ دینے میں مدد کرے گا۔
 
بدر نے مزید کہا ہمیں سیف سٹی پراجیکٹس کے تحت  پاکستان میں    ڈیٹا سینٹرز قائم کرنے کی سخت ضرورت ہے۔ کچھ اعلیٰ چینی کمپنیاں جیسے  ہواوے، JD. Com اور Tencent مزید تعاون پر بات چیت کے لیے اپنے وفود پاکستان بھیج سکتی ہیں۔ 
 
 حال ہی میں  ہم آئی ٹی ایکسپورٹ میں 30 فیصد سے زیادہ اضافہ دیکھ رہے ہیں۔ اس لیے میں سمجھتا ہوں کہ اگر ان تقریبات کا اہتمام کیا جاتا ہے، تو ایس سی او  ڈیجیٹل معیشت اور جدت کے شعبے میں مزید تعاون کے لیے ایک بہت مضبوط پلیٹ فارم مہیا کر سکتی ہے۔
 
کمرشل قونصلر نے کہا کہ پاکستان ڈیجیٹل اکانومی کے فوائد رکن ممالک کے ساتھ شیئر کرنے کے لیے ہر قسم کی سہولت فراہم کرنے  کو  تیار ہے۔

  • comments
  • give_like
  • collection
Edit
More Articles